جرمنی: ایران کیلئے جاسوسی کے الزام میں پاکستانی گرفتار

0
12

DUبرلن: جرمن حکام نے ایک پاکستانی شخص کو ایران کے لیے جاسوسی کرنے کے الزام میں گرفتار کرلیا۔خبر رساں ادارے ایسوسی ایٹڈ پریس (اے پی) کے مطابق جرمنی کے فیڈرل پراسیکیوٹر نے بتایا کہ 31 سالہ سید مصطفیٰ حسین کو ایران کے لیے جاسوسی کرنے پر شمالی شہر بریمن سے گرفتار کیا گیا۔

انہوں نے بتایا کہ مصطفیٰ حسین جرمنی اور اسرائیل کے تعلقات کو بہتر بنانے والی سوسائٹی کے سابق سربراہ کی جاسوسی کر رہا تھا۔07 Pak 07Jul

فیڈرل پراسیکیوٹر کے مطابق مصطفیٰ ایران کے انٹیلی جنس یونٹ سے رابطے میں تھا اور اس نے اکتوبر میں جرمن-اسرائیل سوسائٹی کے سابق سربراہ کی جاسوسی کرتے ہوئے ایران کو معلومات فراہم کی تھیں۔

رپورٹس کے مطابق ملزم مصطفیٰ کو عدالت کی جانب سے اُس وقت تک زیرِ حراست رکھنے کا عبوری حکم جاری کیا گیا ہے، جب تک ایران کے لیے جاسوسی کے الزامات کے حوالے سے کہ ان پر باقاعدہ فرد جرم عائد نہیں کردی جاتی۔

دوسری جانب جرمن-اسرائیل سوسائٹی کے سابق سربراہ اور قانون ساز رائن ہولڈ روبے نے بتا کہ ’وہ جاسوسی کی اس خبر پر حیران نہیں ہوئے اور نہ ہی انہیں کسی قسم کا خوف ہے۔‘

واضح رہے کہ رائن ہولڈ روبے جرمن-اسرائیلی سوسائٹی کے سربراہ رہنے کے علاوہ جرمن فوج سے متعلقہ امور کے نگران عہدیدار کے فرائض بھی سرانجام دے چکے ہیں۔