شام کا اہم دفاعی شہر دولتِ اسلامیہ کے’قبضے سے آزاد‘

0
15

BBC Urdu6 آگست16: شام سے ملنے والی اطلاعات کے مطابق امریکہ کے حمایت یافتہ کرد اور عرب جنگجوؤں نے شدت پسند تنظیم دولتِ اسلامیہ کے زیرِقبضہ شام کے شہر منبج‎‎ پر تقریباً مکمل کنٹرول حاصل کر لیا ہے۔

ترکی کی سرحد کے قریب واقع یہ شہر دفاعی8011.01 Syria  06Aug16 اعتبار سے اہم مجھاجاتا ہے اور گذشتہ دو برس سے اس پر دولتِ اسلامیہ کا قبضہ تھا۔ن آبزرویٹری فار ہیومن رائٹس کے مطابق شہر کے وسط میں ابھی بھی دولتِ اسلامیہ کے کچھ جنگجو موجود ہیں۔

خیال رہے کہ امریکہ کے حمایت یافت کرد اور عرب جنگجوؤں کے اتحاد نے منبج‎‎ پر کنٹرول حاصل کرنے کے MB_001لیے تقریباً دو ماہ قبل کارروائی کا آغاز کیا تھا۔جون سے اس شہر کو جنگجوؤں نے مکمل طور پر گھیرے میں لے رکھا تھا۔

اس کارروائی کے دوران امریکی فضائیہ کے طیارے بھی شہر میں موجود شدت پسندوں کے ٹھکانوں کو نشانہ بناتے رہے ہیں۔امریکی فضائMB_005یہ کی بمباری کے نتیجے میں شہر سے بھاگنے والے عام شہریوں کی ہلاکتوں کی بھی اطلاعات ہیں۔اس سے قبل اقوامِ متحدہ کے انسانی حقوق کمشنر نے خبردار کیا تھا کہ شہر میں پھنسے 70,000 عام شہریوں کو خطرناک صورتحال کا سامنا ہے۔MB_004

کرد اور عرب جنگجوؤں کے اتحاد کے ترجمان نے خبررساں ادارے روئٹرز کو بتایا ہے کہ شہر کا 90 فیصد حصہ دولتِ اسلامیہ کے قبضے سے آزاد کروا لیا گیا ہے۔منبج‎‎ کو ترکی سے ملانے والی سٹرک دولتِ اسلامیہ کے لیے شام میںMB_002 جنگجوؤں اور رسد منگوانے کا ایک اہم راستہ ہے۔خیال رہے کہ مارچ 2011 سے شام میں شروع ہونے والے اس تنازع کے بعد سے اب تک دو لاکھ 80 ہزار افراد ہلاک اور لاکھوں بے گھر ہو چکے ہیں جبکہ تین لاکھ افراد تاحال ان علاقوں میں پھنسے ہوئے ہیں۔