صحرائے سینا میں ’دولتِ اسلامیہ کے سربراہ ہلاک‘

0
7

BBC Urdu5 اگست: مصر کی فوج کا کہنا ہے کہ اس نے صحرائے سینا میں نام نہاد دولتِ اسلامیہ کی شاخ کے سربراہ کو ان کے درجنوں جنگجوؤں سمیت ہلاک کر دیا ہے۔مصری فوج کے مطابق ابو دعا الانصاری کو سینا صوبے میں فضائی حملوں میں ہلاک کیا گیا۔8002.01 Sina 05Aug16

ان فضائی حملوں میں العارش نامی قصبے میں جنگجوؤں کے ٹھکانوں کو نشانہ بنایا گیا یہ علاقہ ان کا مضبوظ گڑھ سمجھا جاتا ہے۔مصر کے صحرائے سینا کے علاقوں میں شدت پسند زیادہ متحرک ہیں اور یہ سینا اور قاہرہ میں کیے جانے والے بڑے حملوں میں ملوث رہے ہیں۔مصری فوج کا کہنا تھا ’ان حملوں میں کم سے 8002.02 Sina 05Aug16کم 45 شدت پسند مارے گئے اور درجنوں زحمی ہیں جبکہ ان کا کافی اسلحہ تباہ ہوا ہے۔‘برگیڈیئر جنرل محمد سمیر نے فیس بک پر ایک پوسٹ میں لکھا کہ ’ایک مصدقہ اطلاع کے بعد کی جانے والی کارروائی میں انصاری مارا گیا۔‘